دنیا

امیر کویت کی درخواست پر سعودی عرب اور قطر نے اپنے تعلقات بحال کر لئے

کویت اردو نیوز 04 جنوری: امیر کویت نے ثالث کا کردار ادا کرتے ہوئے سعودی عرب اور قطر کے مابین تعلقات کو پھر سے بحال کرنے میں نمایاں کردار ادا کیا۔

تحریر جاری ہے‎

تفصیلات کے مطابق سعودی عرب اور قطر کے مابین سرحدیں آج رات سے کھول دی جائیں گی۔ کویت کے وزیر خارجہ شیخ ڈاکٹر احمد الناصر کے کویت کے مقامی ٹی وی پر کیے گئے اعلان کے مطابق ایک معاہدے کے تحت آج رات سے مملکت سعودی عرب اور ریاست قطر کے مابین فضائی، زمین و بحری سرحدیں کھول دی جائیں گی۔

شیخ الناصر نے آج رات کویت کے سرکاری ٹی وی کے ذریعہ جاری کردہ بیان میں مزید بتایا کہ “سعودی عرب کی سلطنت میں العلا گورنیٹ میں کل ہونے والے خلیج تعاون کونسل کے سربراہی اجلاس کے موقع پر امیر الکویت عزت مآب شیخ نواف الاحمد نے قطری امیر عزت مآب شیخ تمیم بن حماد الثانی اور سعودی عرب کے ولی عہد سعودی وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلمان بن عبد العزیز السعود سے فون پر بات چیت کی۔

فیصلہ سننے کے بعد عرب خلیجی شہریوں میں خوشی کا سماں

شیخ ناصر نے مزید کہا کہ “اس فون کال کے دوران اس بات پر زور دیا گیا کہ ہم سب صفوں کے اتحاد کی خواہش رکھتے ہیں اور العلا بیان پر دستخط کرکے اس کا اظہار کریں گے۔

شیخ الناصر نے بیان جاری رکھتے ہوئے مطلع کیا کہ شیخ نواف الاحمد کی تجویز کی بنیاد پر آج رات سے مملکت سعودی عرب اور ریاست قطر کے مابین فضائی، زمینی اور سمندری سرحدیں کھولنے پر اتفاق کیا گیا ہے۔

حوالہ
الرای
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

ایک تبصرہ

  1. کیا وجہ ھے کہ کویت کے تعلقات پاکستان سے ھموار نہیں ھو رھے۔ابھی پوری دنیا میں پاکستان ایک ایسا ملک ھے جس نے کورونا کے متعلق اھم اقدامات کرتے ھوے اس پر بہترین قابو پایا اور کم سے کم کیس اور اموات رپورٹ ھوئیں جبکہ اسکے مقابلے میں امریکہ انڈیا برطانیہ وغیرہ میں بہت نقصان ھوا ھے اور کویت نے پاکستان کو ممنوعہ ممالک کی فہرست میں رکھا ھوا ھے اسکی اصل وجہ کیا ھے کہ پاکستان کے ساتھ یہ سلوک کیوں ۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ