دنیا

15 سال بعد سعودی شہزادہ کوما سے بیدار ہو گیا

کویت اردو نیوز 03 جنوری: 15 سال کوما میں رہنے کے بعد سعودی عرب کے شہزادہ الولید بن خالد بن طلال کے ہاتھ نے حرکت کر دی۔

تحریر جاری ہے‎

تفصیلات کے مطابق سعودی شہزادہ الولید بن خالد بن طلال “جو 15 سال سے کوما میں ہیں” نے اپنے ڈاکٹر کی ہدایت کا جواب دیا اور ایک تازہ ترین ویڈیو کلپ میں متعدد بار ہاتھ ہلاتے دکھائی دیے۔

ان کی بہن شہزادی نوف بنت خالد بن طلال کے ذریعہ ایک ویڈیو کلپ شائع کیا گیا جس میں شہزادہ کی صحت کی بحالی کی ویڈیوز کی ایک سیریز ہے جس میں وہ اپنے والد کے گھر میں معالجہ کرنے والے ڈاکٹر کی درخواست پر ایک سے زیادہ بار جن کی آواز ویڈیو میں نمودار ہوئی اس سے اپنا ہاتھ آگے بڑھانے کو کہتے ہیں۔ شہزادہ خالد بن طلال 15 سال سے اپنے بستر پر کوما میں ہیں ۔

تصویر میں سعودی عرب کے شہزادوں میں سے ایک شہزادہ الولید بن خالد بن طلال کا نام ہے جسے (سویا ہوا شہزادہ) کہا جاتا ہے۔ 2015 میں ڈاکٹروں نے ان کے آلات کو منقطع کرنے کا فیصلہ کیا تھا لیکن ان کے والد نے اس امید پر ایسا کرنے سے انکار کردیا کہ شاید کوئی معجزہ ہوگا اور شہزادہ ایک دن جاگ اٹھے گا۔

حوالہ
الأنباء
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ