دنیا

ترکی میں گیس کے بڑے ذخائر دریافت

کویت اردو نیوز 22 اگست: طیب اردگان کا بڑا اعلان، ترکی کی تاریخ میں سب سے بڑے گیس کے ذخائر دریافت۔

تفصیلات کے مطابق صدر رجب طیب اردوان نے گزشتہ روز بروز جمعہ اعلان کیا کہ ترکی نے بحیرہ اسود میں ذخائر کی تلاش کے دوران ترکی کی تاریخ میں اب تک کے سب سے بڑے قدرتی گیس کے ذخائر دریافت کرلئے ہیں۔

طیب اردوان نے اپنے بیان میں انکشاف کیا کہ 320 بلین مکعب میٹر گہرے سمندر میں ترک بحری جہاز “فاتح” نے پچھلے ایک ماہ کی تلاش کے بعد بالآخر گیس کے بڑے ذخائر دریافت کرلئے ہیں۔ عوام کو مطلع کرتے ہوئے انہوں نے مزید کہا کہ 2023 میں ترک صارفین کو پہلی گیس تک رسائی حاصل ہونے کی امید ہے جو کہ جدید جمہوریہ کا 100 واں سال بھی ہوگا۔

“ترکی نے بحیرہ اسود میں ترکی کی تاریخ کے سب سے بڑے گیس کے ذخائر دریافت کرلئے ہیں” یہ خبر طیب اردوان نے خوشی و مسرت کے ساتھ اپنی عوام کو استنبول ڈولمابھاسے پیلیس میں اپنے خطاب کے دوران دی۔ انہوں نے مزید کہا کہ “میرے رب نے ہمارے لئے بے مثال دولت کی راہیں کھول دی ہیں۔”

یہ خبر بھی پڑھیں: آبادیاتی ڈھانچے میں بڑی ترمیم کی توقع

“دی فتح” ترکی کا پہلا ڈریلینگ بحری جہاز ہے جسکا نام عثمانی سلطان فاتح سلطان مہمت کے نام سے منسوب ہے جنہوں نے قسطنطنیہ موجودہ دور کا استنبول 1453 میں فتح کیا تھا۔ فاتح جہاز 20 جولائی کو گیس کی تلاش کے لیے بحیرہ روم روانہ ہوا تھا جہاں پر انہوں نے ٹیونا 1 کے مقام پر ڈرلنگ کی تھی۔ طیب اردوان نے کہا کہ انہیں امید ہے کہ اسی مقام پر مزید دریافتیں سامنے آئیں گی۔

وزیر خزانہ اور اردگان کے داماد بیرات البیرک نے فاتح کے اوپر تقریر کرتے ہوئے کہا کہ اس دریافت اور مستقبل کی صلاحیت سے ملک کے اعلی سالانہ توانائی درآمدی بل پر غور کرنے سے ترکی کے بڑھتے ہوئے کھاتے کے خسارے کو کم کرنے میں مدد ملے گی۔

اس مسئلے نے انکارا کو یونان ، قبرص اور یورپی یونین کے خلاف کھڑا کردیا گیا ہے اور فرانس کے ساتھ تناؤ کو بڑھاوا دیا ہے جس نے خطے میں اپنی فوجی موجودگی کو تیز کردیا ہے۔ اردگان نے مشرقی بحیرہ روم کی تلاش کو فوری طور پر ختم کرنے کے لئے یورپی یونین کے مطالبات پر عمل درآمد کا کوئی اثر نہیں لیا اور نہ ہی ذخائر کی تلاش کے کام کو روکنے کی کوئی ہدایت جاری کی ہے۔

کویت اردو نیوز کے یوٹیوب چینل کو ضرور سبسکرائب کریں

یورپی یونین کے مطالبات کے باوجود طیب اردوان نے مزید بیان دیتے ہوئے کہا کہ “ہم بحیرہ روم میں (ڈرلنگ جہاز) کنونی کے ساتھ سال کے آخر میں اپنی سرگرمیاں تیز کردیں گے تاہم ابھی کنونی بحالی کے مرحلے میں ہے اور ہم الله کی رضا کے ساتھ مزید خوشخبریوں کی توقع کرتے ہیں۔

پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

Open

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ