کویت

مکمل کرفیو، کویتی شہریوں کی واپسی کے بعد!

کویت سٹی 20 اپریل: روزنامہ عرب ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق وزیر صحت ڈاکٹر باسل الصباح نے بیرون ملک سے شہریوں کو انخلاء کی تکمیل کے بعد وائرس کا مقابلہ کرنے کے لئے احتیاطی تدابیر کے تحت تمام متعلقہ حکام کے ساتھ ہم آہنگی کرتے ہوئے ملک میں مکمل پابندی عائد کرنے کے ایک مطالعے کا انکشاف کیا ہے۔ وزیر صحت شیخ ڈاکٹر باسل الصباح نے کہا کہ کورونا وائرس “جوان” یا “بوڑھے” کو ہی نہیں بلکہ ہر عمر کے افراد کو شدید متاثر کرتا ہے۔ انہوں نے شہریوں اور رہائشیوں سے اپیل کی کہ وہ ” اس وائرس کو کسی بھی لحاظ سے کم نہ سمجھیں اور صحت کی سفارشات پر عمل کریں تاکہ کسی بھی نقصان سے بچا جا سکے”۔جلیب الشیوخ اور مھبولہ کے علاقوں میں جانچ پڑتال کے بعد بہت سارے معاملات دریافت ہوئے جنہیں میڈیکل ٹیموں نے کورونا وائرس سے نمٹنے کے لئے ایک مہم میں ان علاقوں کی جانچ پڑتال کرنے اور متاثرہ معاملوں کو الگ تھلگ کرنے کی ہدایت کی۔ وائرس ابھی بھی وزارت کے قابو میں ہے اور کیسوں کی تعداد میں اضافہ معمول کی بات ہے جبکہ اللہ کا شکر ہے کہ رابطوں کی جانچ پڑتال کے ساتھ شفایابی کے معاملات میں اضافہ ہورہا ہے۔ ہم نے تمام بازیاب مریضوں سے ان کا پلازما عطیہ کرنے کی اپیل کی تاکہ وہ وائرس کے علاج میں اس کی کوشش کریں۔ وزارت صحت سے متعلق عالمی ادارہ صحت کے ساتھ وائرس کے لئے کسی بھی دوا کی موجودگی کے سلسلے میں ہونے والی تمام پیشرفتوں کا تعاقب بھی کیا جا رہا ہے۔

پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ