کویت

کویتی شہری ملازمتوں کے لیے تیار نہیں حکومت پریشانی کا شکار

کویت اردو نیوز 19 جنوری: ملک میں کویتائزیشن کے نفاذ کے بعد سرکاری اور نجی شعبوں میں شہریوں کی بڑی تعداد دیکھنے میں آرہی ہے تاہم کچھ مخصوص ملازمتیں ایسی بھی ہیں جن سے کویتی شہری گریز کررہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سرکاری ایجنسیوں میں کویتی ملازمین کی تعداد میں اضافے کے باوجود شہریوں کے لئے موجود ملازمتوں کی اسامیاں خالی ہیں۔ سرکاری محکموں میں ناقص العمل تقسیم بھی اسوقت شہریوں کی بے روزگاری کا سبب بنی ہوئی ہے تاہم متعدد رپورٹس میں یہ مسئلہ بھی منظر عام پر آیا ہے کہ چند ملازمتیں ایسی بھی ہیں جن پر کویتی شہری کام ہی نہیں کرنا چاہتے اور ہچکچاہٹ کا شکار ہیں۔

روزنامہ الجریدہ کی رپورٹ کے مطابق کچھ ملازمتیں جو سول سروس کمیشن (CSC) کو جمع کرائی گئیں ان میں بھرتیوں کے لئے شہری درخواست دہندگان کی سخت کمی ہے جبکہ اعدادوشمار کے مطابق سالانہ ہزاروں شہری متعلقہ ملازمتوں کے مطابق تعلیم حاصل کرتے ہیں اور ملازمتوں کے اہل ہوتے ہیں۔

متعلقہ مضامین

سی ایس سی کی رپورٹ کے مطابق حکومت کو 32 نوکریوں کے عنوانوں کے لئے افرادی قوت کی ضرورت ہے جنہیں سی ایس سی کی ملازمت گریڈنگ درجہ بندی کی بنیاد پر 11 گروپوں میں تقسیم کیا گیا تھا جس میں یونیورسٹی ڈگری یا اس سے زیادہ اہلیت رکھنے والوں کےلئے (25 جاب ٹائٹلز) جبکہ ڈپلومہ ہولڈرز کے لئے چار گروپ (سات جاب ٹائیٹلز) شامل ہیں۔

افرادی قوت کی درخواستوں کے مطابق میڈیکل سیکٹر برسوں سے افرادی قوت کی شدید قلت کا شکار ہے۔ خاص طور پر یہ ملازمتیں ڈاکٹرز ، دانتوں کے ڈاکٹرز ، نرسز اور اسسٹنٹ نرسز اس کے علاوہ طبی لیبارٹری کی تخصیصات جیسے ریڈیولاجی ، جسمانی تھراپی ، پیشہ ورانہ تھراپی ، دانتوں کی لیبارٹری ، نس بندی ، سانس کی تھراپی اور نیوکلیئر میڈیسن وغیرہ۔ میڈیکل سپورٹ ملازمتوں کے علاوہ ویٹرنری میڈیسن گروپ میں ‘ویٹرنریئن’ کی ملازمتوں میں بھی اسامیاں خالی ہیں۔

سرکاری اداروں نے انفارمیشن سسٹمز اینڈ ٹکنالوجی گروپ میں پروگرام ڈیزائنر ، جونیئر دستاویز اور انفارمیشن تجزیہ کار ، کمپیوٹر آپریٹر اور سائبر سکیورٹی ماہر کی ضرورت کا بھی اظہار کیا ہے۔ جہاں تک ٹیچنگ گروپ کی بات ہے کیمسٹری ، فزکس ، ریاضی ، عربی ، فرانسیسی ، بیالوجی اور آرٹ اساتذہ کی ضرورت ہے جبکہ ریاضی اور شماریات گروپ کے لئے اعدادوشمار کے تجزیہ کار کی ضرورت ہے۔

مزید برآں سرکاری اداروں کو انسپیکشن گروپ میں ڈپلومہ ہولڈرز کی ضرورت ہے جیسے انسپیکشن گروپ میں فوڈ انسپکٹر کی ضرورت ہے۔ ایڈمنسٹریٹو سپورٹ گروپ میں سکریٹری اور ٹائپسٹ، انجینئرنگ گروپ میں اسسٹنٹ کمپیوٹر انجینئر ، ٹیکنیشن اور دوسرا الیکٹرانکس یا آلات ٹیکنیشن جبکہ لاء گروپ میں قانونی کلرک کی ضرورت ہے۔ شہریوں کے لئے ملازمتوں کے لامحدود مواقع اور کثیر اسامیوں کے باوجود شہری ان ملازمتوں پر کام نہیں کرنا چاہتے اور یہ اسامیاں خالی پڑی ہوئی ہیں۔

حوالہ
عرب ٹائمز
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button