کویت

کویت سے باہر پھنسے جائز اقامہ والے تارکین وطن کی تعداد تقریبا 300000 ہے

کویت اردو نیوز 29 دسمبر: رہائشی اقامہ کی خلاف ورزی کرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 176،000 ہوگئی جبکہ ڈیڈ لائن سے ایک فیصد سے بھی کم غیر قانونی رہائشیوں نے فائدہ اٹھایا۔

تحریر جاری ہے‎

تفصیلات کے مطابق وزارت داخلہ کی جانب سے رہائشی اقامہ کی خلاف ورزی کرنے والوں کو اپنا اقامہ لگوانے یا ملک چھوڑنے کے لئے دی گئی آخری تاریخ کل ختم ہو رہی ہے۔ باخبر ذرائع نے الرای کو بتایا کہ “آخری تاریخ کا فائدہ اٹھانے کے لئے اقامہ خلاف ورزی کرنے والے تارکین وطن کا ٹرن آؤٹ بہت کم تھا جبکہ اقامہ خلاف ورزی کرنے والوں کی مجموعی تعداد میں سے ایک فیصد (1000 سے بھی کم) سے زیادہ نہیں ہے۔ “

ذرائع نے یہ انکشاف کرکے حیرت پیدا کردی کہ “کویت میں رہائشی اقامہ کی خلاف ورزی کرنے والوں کی تعداد جو گذشتہ نومبر کے اختتام سے پہلے تقریبا 130,000 تھی ملک کے اندر مقیم تارکین وطن کے داخلے کے ساتھ بڑھ کر تقریبا 176,000 ہوگئی”۔ وزارت داخلہ کا ارادہ ہے کہ گذشتہ دنوں کے دوران ہوائی اڈہ پر ہوائی ٹریفک کی معطلی ، بندرگاہوں کی بندش اور بہت سے لوگوں کی ڈیڈ لائن سے فائدہ اٹھانے میں عدم استحکام کی وجہ سے اقامہ خلاف ورزی کرنے والوں کے لئے آخری تاریخ پھر سے ایک ماہ کے لئے بڑھا دی جائے گی۔

ایک متعلقہ پیشرفت میں ذرائع نے بتایا کہ “جائز اقامہ رکھنے والے کویت سے باہر پھنسے تارکین وطن کی تعداد تقریبا 300,000 ہے جبکہ تقریبا 150,000 افراد کے اقامہ کی تجدید نہ ہونے اور ان کے ملک سے باہر ہونے کی وجہ سے کویت کی رہائشی حیثیت ختم ہو گئی ہے۔”

حوالہ
الرای
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ