کویت

جلیب الشویخ کے رہائشی کویتی شہریوں نے حکومت سے اپیل کر دی

کویت اردو نیوز 28 دسمبر: “ہم اپنے آپ کو غیر محفوظ اور علاقے میں اجنبی محسوس کرتے ہیں”۔ جلیب الشویخ میں رہنے والے کویتی شہریوں نے حکومت سے اپیل کر دی۔

تحریر جاری ہے‎

روزنامہ الأنباء نے شائع کردہ رپورٹ کے مطابق جلیب الشیوخ کا علاقہ کئی سالوں سے ایسے مسائل میں مبتلا ہے جس کی بڑی وجہ بیچلرز کی بڑی موجودگی، چوریوں اور وسیع پیمانے پر جرائم، سڑکوں اور صفائی کے خستہ حال اور انفراسٹرکچر کی وجہ سے قریبی علاقوں عباسیہ اور الحساوی جیسے علاقوں سے درآمد میں پریشانی ہے۔ روزنامہ جیلیب الشیوخ کے علاقے میں انتہائی اہم چیلنجوں پر روشنی ڈالنے کے خواہاں روزنامہ نے وہاں بسنے والے متعدد شہریوں سے ملاقات کی تاکہ ان کی رائے سنیں اور ان کی شکایات اور مطالبات مجاز حکام تک پہنچائیں۔

کویت کے رہائشیوں نے علاقے میں بڑی تعداد میں تارکین وطن کی نقل مکانی کے باعث سلامتی اور استحکام کے فقدان کی تصدیق کی۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ سرکاری مکانات کرایہ پر لینے یا انھیں دکانوں اور بطور گوداموں کے استعمال کرنے والوں سے سرکاری مکانات واپس لیں اور انہیں مستحق شہریوں کو دیا جائے۔

مکینوں نے بتایا کہ اس علاقے میں صرف 550 مکانات آباد ہیں اور اس کی گلیوں میں گیراجوں کے قریب اس کی جگہ کے لئے گاڑیاں بھری ہوئی ہیں جس کی وجہ سے انہیں ایسا لگتا ہے کہ جیسے وہ اپنے ہی علاقے میں اجنبی ہیں۔ انہوں نے متعلقہ حکام سے مطالبہ کیا کہ بہت دیر ہونے سے پہلے اس صورتحال کو بچانے میں تیزی لائیں۔

حوالہ
عرب ٹائمز
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ