کویت

کویت وزارت تجارت کا گھریلو ملازمین کے لئے سخت فیصلہ

کویت اردو نیوز 28 دسمبر: کویت وزارت تجارت نے گھریلو ملازمین کے لئے سخت فیصلہ سنا دیا۔

تحریر جاری ہے‎

تفصیلات کے مطابق وزارت تجارت نے 60،000 گھریلو ملازمین کے راشن کارڈ منسوخ کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ اس فیصلے سے ریاست کو 4 لاکھ دینار سالانہ کی بچت ہوگی۔ روزنامہ الرای کی رپورٹ کے مطابق وزارت تجارت نے اعلان کیا کہ وہ جنوری کے آغاز سے اپنے کفیل کے تحت کام نہ کرنے والے 60،000 گھریلو ملازمین کے فوڈ راشن کارڈ منسوخ کردیں گے۔

ذرائع نے الرای کو بتایا کہ کچھ گھریلو ملازمین ملک چھوڑ کر جا چکے ہیں اور ان کے کفیلوں نے انکے راشن کارڈز کے اسٹیسس اپ ڈیٹ نہیں کئے ہیں اور اپنے ملازمین کے راشن کارڈز پر اضافی راشن لے رہے ہیں جبکہ گھریلو ملازم اب انکا ماتحت نہیں ہے۔ اس فیصلے سے اب ملک کو چار لاکھ دینار کی سالانہ بچت ہوگی۔ وزیر تجارت فیصل المدلج نے نشاندہی کی کہ گھریلو ملازمین کویتی شہریوں کے مقابلے میں فوڈ راشن کارڈ سے بالکل وہی فوائد حاصل کرتے ہیں جو ایک کویتی شہری کو حاصل ہیں۔

جہاں تک نئے گھریلو کارکنوں کا تعلق ہے وزارت تجارت نے مطالبہ کیا کہ انہیں اپنے کفیلوں کے راشن کارڈ کے تحت فوری طور پر شامل کیا جائے خاص طور پر چونکہ بہت سے لوگوں نے اپنے ڈیٹا کو اپ ڈیٹ کیے بغیر اپنے ورک پرمٹ میں تبدیلی کی ہے لہذا ایسے افراد کو راشن کارڈز کے فوائد حاصل نہیں ہونگے۔

وزارت تجارت تمام کویتوں کو چاول اور روٹی سے لے کر تیل اور مرغی تک کی سبسڈی والی اشیائے خوردونوش فراہم کرتی ہے۔ ہر کویتی شہری کے گھر کو راشن کارڈ دیا جاتا ہے جبکہ گھریلو ملازمین کو گھر کا ایک حصہ ہونے کے حساب سے ہی راشن دیا جاتا ہے۔

حوالہ
الرای
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ