کویت

کویت کی وزارت داخلہ نے 21 لاکھ افراد کے آن لائن اقامہ معاملات نمٹا دئیے

کویت اردو نیوز 19 دسمبر: وزارت داخلہ (ایم او آئی) نے اعلان کیا کہ وزارت داخلہ کی آن لائن ویب سائٹ کے ذریعہ 2،190،641 رہائشی اقامہ کے لین دین کی کارروائی کی گئی ہے۔

تحریر جاری ہے‎

تفصیلات کے مطابق وزارت کے سیکیورٹی تعلقات اور میڈیا کی عمومی انتظامیہ نے ایک پریس بیان میں کہا ہے کہ سائٹ پر لین دین کو مکمل کرنے کے لئے رجسٹرڈ تقرریوں کی کل تعداد 59،136 لین دین ہے۔ یہ اقدامات کورونا وائرس (کوویڈ ۔19) کے پھیلاؤ کے مقابلہ میں موجودہ حالات کو ملک پر اثر انداز کرنے کے جواب کے طور پر اٹھائے گئے تھے جس کا مقصد سیکیورٹی اسٹیبلشمنٹ کی جانب سے اپنے خدمات کے شعبوں کو ترقی دینے کی کوششوں کے مطابق شہریوں اور تارکین وطن کی حفاظت اور صحت کے تحفظ کے لئے صحت کی ضروریات کو عملی جامہ پہنانا ہے۔ نومبر میں وزارت داخلہ نے رہائشی ویزا کی خلاف ورزی کرنے والوں کی حیثیت میں ترمیم کرنے کے لئے تقرریوں کی بکنگ کے لئے ایک آن لائن سروس اپنی ویب سائٹ پر شروع کی۔https://www.moi.gov.kw/main/eservices/residence/illegals-appointmentsرہائشی اقامہ کی خلاف ورزی کرنے والوں کو بغیر کسی قانونی کارروائی کے اپنے رہائشی ویزا کی تجدید کے لئے دسمبر کے آخر تک ایک ماہ کی توسیع کی منظوری دی گئی تھی۔ وزارت داخلہ نے کہا ہے کہ اگر کوئی خلاف ورزی کرنے والا نیا رہائشی ویزا حاصل کرنا چاہتا ہے تو وہ تفتیشی حکام کے حوالے کیے بغیر جرمانہ ادا کرنے کے قابل ہو جائے گا۔ عمل سب سے پہلے متعلقہ رہائشی امور کے محکمہ کے لئے ویب سائٹ پر ملاقات کے ذریعے شروع ہوتا ہے۔

وزارت داخلہ نے کہا ہے کہ اگر رہائشی اقامہ کی خلاف ورزی کرنے والے کسی بھی فرد کے علاقے کے محکمہ میں پیشگی اپائنٹمنٹ دستیاب نہیں ہے تو وزارت داخلہ کی ویب سائٹ پر تاریخوں کی دستیابی کے مطابق تقرری دوسرے محکمہ میں منتقل کی جاسکتی ہے۔ وزارت داخلہ نے مزید کہا کہ اگر خلاف ورزی کرنے والا خادم ویزہ (آرٹیکل 20) پر ہے اور کفیل کویتی ہے تو ویزا کی تجدید سروس مراکز کے ذریعہ ہوتی ہے جبکہ باقی ویزا کی تجدید ویب سائٹ پر تقرریوں کے بعد رہائشی امور کے محکموں میں ہوتی ہے۔وزارت داخلہ نے تصدیق کی کہ آن لائن تقرریاں اقامتی ویزا کی خلاف ورزی کرنے والوں اور ہر قسم کے انٹری ویزا کے لئے ہیں جن کا رہائشی یا داخلہ ویزا یکم جنوری 2020 اور اس سے قبل ختم ہوچکا ہے۔دوسری جانب رہائشی ویزا کی خلاف ورزی کرنے والوں کو کم کرنے کی کوشش میں مدد کے لئے پبلک اتھارٹی برائے افرادی قوت (پی اے ایم) ہزاروں “مفرور معاملات” کو حل کرنے کے لئے کام کر رہی ہے جو جرمانے کی ادائیگی اور ان کی حیثیت کو طے کرنے میں خلاف ورزی کرنے والوں کے لئے رکاوٹ ہیں۔

پی اے ایم کے ایک ذمہ دار ذرائع نے روزنامہ الرای کو کہا کہ وہ اپنی مکمل ذمہ داریوں کو نبھانے اور مزدوری کی شکایات پر عمل پیرا ہونے کے خواہاں ہے بشمول مفرور اطلاعات جن میں نہ صرف نجی شعبے میں مزدوروں کے حقوق کے تحفظ کے لئے پیش کی گئی ہے بلکہ یہ بھی یقینی بنانا ہے کہ وہ مزدور تعلقات کے تعین کے ضوابط سے متعلق قوانین اور فیصلوں کے دائرے میں آجروں کے لئے اپنی ذمہ داریاں پوری کرتے ہیں۔

مفرور معاملات کے معاملات پر جو کچھ کارکنوں کو MOI کی جانب سے دی گئی مقررہ مدت کے اندر اپنی حیثیت کو ایڈجسٹ کرنے سے روکتے ہیں ذرائع نے واضح کیا کہ کارکن مفرور رپورٹ کے خلاف شکایت پیش کرتا ہے تاہم مفرور رپورٹ کو معاف کرنے کے لئے آجر کی رضامندی کے بغیر نہیں ہٹایا جا ئے گا اور صرف اس صورت میں جب وہ اتھارٹی کے سسٹم میں رجسٹرڈ ہے یا اگر کارکن آجر کی رضامندی کے بغیر مفرور رپورٹ کو جھگڑا کرنے کی چھوٹ میں آتا ہے۔

پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ