کویت

کویت کا پاکستان کے سابق وزیراعظم میر ظفر اللہ خان جمالی کی وفات پر اظہار تعزیت

کویت اردو نیوز 09 دسمبر: کویت کی جانب سے سفارتخانہ پاکستان سے سابق وزیر اعظم پاکستان کی وفات پر تعزیت کا اظہار کیا گیا۔

تحریر جاری ہے‎

تفصیلات کے مطابق سابق پاکستانی وزیر اعظم میر ظفر اللہ خان جمالی کی وفات پر تعزیت کے لئے گذشتہ روز پاکستانی سفارتخانہ کویت میں سفارتی مشن کے سربراہان کا استقبال کیا گیا۔

کویت میں پاکستان کے سفیر سید سجاد حیدر نے کہا کہ صدر جمالی ایک ممتاز پاکستانی سیاستدان تھے جنہوں نے سن 2004ء میں استعفی دینے تک 2002 سے پاکستان کے پندرہویں وزیر اعظم کی حیثیت سے خدمات سر انجام دیں۔

انہوں نے صدر پرویز مشرف کے ساتھ متعدد سیاسی امور پر اختلاف رائے کی وجہ سے استعفیٰ دیا تھا اور پاکستان میں بلوچستان کے خطے سے منتخب ہونے والے پہلے وزیر اعظم بنے تھے۔

سفیر پاکستان نے نامہ نگاروں کو ایک بیان میں کہا کہ “سابق وزیر اعظم نے 1970ء کی دہائی میں سیاست میں قدم رکھا اور کچھ ماہ قبل تک سرگرم رہے۔”

اپنے سیاسی کیریئر کے دوران ایک جماعت کے علاوہ وہ پاکستان پیپلز پارٹی اور شریف ایسوسی ایشن آف اسلامی پاکستان سمیت مختلف جماعتوں سے بھی وابستہ رہے۔

انہوں نے نشاندہی کی کہ مرحوم بلوچستان کے ضلع نصیر آباد کے ایک چھوٹے سے گاؤں روجن جمالی (برطانوی ہندوستانی سلطنت) کے ایک بلوچ سیاسی گھرانے میں میں پیدا ہوئے تھے جو کہ بانی پاکستان محمد علی جناح کا قریبی دوست تھا۔

ان کے والد میر شاہنواز خان جمالی براہ راست سرگرم سیاست میں شامل نہیں تھے بلکہ وہ جرگے کے ممبر اور اس ضلع کے مالک تھے۔

انہوں نے کہا کہ”جمالی نے ابتدائی تعلیم لارنس مرے کالج سے حاصل کی اور لاہور کے ایچی سن کالج سے اے لیول حاصل کیا۔” پھر انہوں نے بیچلرز ڈگری حاصل کرنے کے لئے ایک سرکاری کالج میں تعلیم حاصل کی۔

حوالہ
الرای
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ