کویت

کویت، پاکستان، سعودی عرب ، بحرین اور اردن نے “ڈیجیٹل تعاون تنظیم” کا آغاز کردیا

کویت اردو نیوز 27 نومبر: کویت، پاکستان، سعودی عرب ، بحرین اور اردن نے “ڈیجیٹل تعاون تنظیم” کا آغاز کردیا ہے۔

تحریر جاری ہے‎

تفصیلات کے مطابق کویت ، سعودی عرب ، بحرین ، اردن اور پاکستان میں ٹیلی مواصلات کے شعبوں کے عہدیداروں نے گزشتہ روز جمعرات کو “ڈیجیٹل تعاون تنظیم” کے آغاز کا اعلان کیا جس کا مقصد ڈیجیٹل تبدیلی کے ذریعے اجتماعی خوشحالی ، استحکام اور معاشی نمو کو حاصل کرنا ہے۔

سعودی پریس ایجنسی (SPA) نے بتایا کہ بین الاقوامی تنظیم کا مقصد تمام شعبوں میں تعاون کو مستحکم کرنا ہے اور ڈیجیٹل معیشت کی ترقی کو تیز کرنا ہے۔

ڈیجیٹل کوآپریشن آرگنائزیشن کے ویژن میں خواتین ، نوجوانوں اور کاروباری افراد کو بااختیار بناتے ہوئے سب کے لئے ڈیجیٹل مستقبل کے حصول اور جدت پر مبنی ترقیاتی اڑان کے ذریعے ڈیجیٹل معیشت کی ترقی شامل ہے۔

کویتی پبلک اتھارٹی برائے مواصلات اور انفارمیشن ٹکنالوجی کے چیئرمین اور سی ای او انجینئر سالم الاذینہ نے کہا کہ ڈیجیٹل تعاون تنظیم کویت کے فائدے میں ہے جو اس کے قومی ڈیجیٹل ایجنڈے کو ترقی دینے میں مدد فراہم کرے گی اور ڈیجیٹل سیکٹر کو آگے بڑھانے کے لئے عالمی کوششوں میں مدد کرے گی۔

پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ “پاکستان کو اعزاز حاصل ہے کہ وہ ڈیجیٹل تعاون تنظیم کا بانی رکن ہونے اور عالمی ڈیجیٹل ایجنڈے کی ہدایت اور رہنمائی کے لئے اپنے شراکت داروں کے ساتھ مل کر کام کرے گا۔”

سعودی وزیر مواصلات اور انفارمیشن ٹیکنالوجی انجینئر عبداللہ السواحہ نے ڈیجیٹل تعاون کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ نوجوانوں ، خواتین اور کاروباری شعبوں کے لئے اگلے تین سے پانچ سالوں میں مشترکہ ڈیجیٹل معیشت کو ایک کھرب ڈالر تک ترقی دینے کا ایک سنہری موقع ہوگا۔

السواحہ نے کہا کہ “ہمارے مستقبل کی خوشحالی ڈیجیٹل معیشت سے منسلک ہے لیکن ہم اس وقت تک ڈیجیٹل معیشت کی فراہم کردہ تمام صلاحیتوں سے فائدہ نہیں اٹھا سکیں گے جب تک کہ ہم حکومتوں کی حیثیت سے اپنی کوششوں کو متحد نہ کریں اور ایک نہ ہوں۔ نجی شعبے اور کاروباری افراد کی حمایت حاصل کریں اور موجودہ منڈیوں تک ان کی رسائی کو وسعت دے کر ان کی خوشحالی میں شریک ہوں اور نئی مارکیٹوں میں داخل ہونے میں ان کی مدد کریں۔

السواحہ نے کہا کہ تنظیم کے چارٹر کے مطابق جو ڈیجیٹل ایجنڈے پر مبنی ہے، تنظیم نجی شعبے اور بین الاقوامی تنظیموں ، غیر سرکاری تنظیموں اور تعلیمی دنیا کے ہم منصبوں کے ساتھ شراکت اور تعاون کا خیرمقدم کرتی ہے۔

اردنی وزیر برائے ڈیجیٹل معیشت اور کاروباری شخصیت احمد الہناندہ نے اپنے ملک کو ڈیجیٹل تعاون تنظیم کے بانی ممبروں میں شامل ہونے پر فخر کا اظہار کرتے ہوئے اس اعتماد پر زور دیا کہ اس اقدام سے یہ یقینی بنایاجائے گا کہ ہماری ڈیجیٹل معیشت جدید ہے۔ پائیدار تبدیلی پیدا کرنے کے لئے ہمیں اجتماعی طور پر اور عالمی سطح پر کام کرنا ہوگا۔ ہم میں سے ہر ایک دوسرے سے آزادانہ طور پر کام نہیں کرسکتا ہے اور یہ وہ مقام ہے جہاں ہمارا ڈیجیٹل سفر ایک دوسرے سے منسلک ہوتا ہے جہاں ہم علم ، تجربات اور اعانت کا تبادلہ کرسکتے ہیں۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ کویت کی کابینہ نے سعودی عرب کے ڈیجیٹل ٹرانسفارمیشن آرگنائزیشن میں شامل ہونے کے دعوت نامے کا جائزہ لیا اور سرکاری طور پر فیصلہ کیا کہ ڈیجیٹل ٹرانسفارمیشن آرگنائزیشن میں شامل ہونے کے چارٹر کے اعلامیے کو منظور کیا جائے۔ چارٹر پر دستخط کئے جائیں اور وزارت خارجہ کے ساتھ کوآرڈینیشن تفویض کریں۔ پبلک اتھارٹی فار کمیونیکیشن اینڈ انفارمیشن ٹکنالوجی اور محکمہ فتوی اور قانون سازی کے لئے قانونی طریقہ کار کو مکمل کیا جائے اور آئین کے آرٹیکل (70) کے مطابق ضروری قانونی معاملات کی وضاحت کی جائے۔

حوالہ
الرای
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ