کویت

کویت: کویتی نوجوان نے کورونا کا علاج دریافت کر لیا

کویت اردو نیوز 02 نومبر:  کویتی ماہر سمیات نے کورونا کا علاج دریافت کرلیا۔ کویتی نوجوان نے کورونا وائرس کا علاج دریافت کر کے دنیا کو حیران کردیا۔

تفصیلات کے مطابق ابراہیم المسعود کویت کے نوجوان ماہر ہیں اور وہ برطانیہ میں یونیورسٹی آف لیڈس میں ڈاکٹریٹ کے محقق ہیں۔  ان کے آخری سال کا مطالعہ COVID-19 وبائی امراض کے متعلق تھا  جس نے پوری دنیا کو درہم برہم کیا ہوا ہے۔

ایک انٹرویو میں انہوں  نے انکشاف کیا کہ وہ COVID-19 وائرس کی نقل و حرکت اور اس کے جسم کے خلیوں میں چھپ جانے سے روکنے کے  ڈاکٹریٹ پروگرام میں اپنے سپروائزر کے ہمراہ کام کر رہے ہیں تاکہ اس پر قابو پانے کی تیاری میں اس کا مدافعتی نظام سامنے آجائے۔

المسعود نے زور دے کر کہا کہ وہ ابتدائی نتائج پر پہنچ چکے ہیں اور توقع کی جارہی ہے کہ علاج دو ماہ کے اندر اثر دکھائے گا۔ انہوں نے وضاحت کی کہ جس دوا پر وہ کام کر رہے ہیں وہ وائرس سے  ٹکرائے گی جس سے وہ خلیوں میں پوشیدہ نہیں رہ سکے گا اور یہ مدافعتی نظام میں شامل ہو جائیں گے جو اس کا مقابلہ کرے گا۔ 

مہلک وائرس مدافعتی نظام سے خلیوں میں چلے جاتے ہیں۔  اگر وہ خلیے کی جھلی پر یا خون میں ظاہر ہوتے ہیں تو سفید خون کے خلیے ان پر قابو پانے کے لئے حملہ کرتے ہیں اور وائرس کو بے نقاب کرکے مدافعتی نظام کو پاک کرتے ہیں۔

مزید پڑھیں: فلو کی ویکسین تارکین وطن کے لیے دستیاب نہیں ہے

المسعود نے بتایا کہ اس کے تجربات سیل کے کسی بھی حصے کے ساتھ وائرس لفافے کے لگاؤ ​​کو روکنے کے لئے کیے جارہے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ اگر اس روابط کو روکا گیا تو وائرس خلیوں کی جھلی پر ظاہر ہوگا اور نہ کہ اندر جس کی وجہ سے دوسرے وائرسوں کی طرح مدافعتی نظام اس سے بھی لڑنے کے قابل ہوجائے گا۔

حوالہ
عرب ٹائمز
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ