کویت

کویت: خیطان کے رہائشیوں کی مشکلات فیملیز کے ساتھ بیچلرز کا رہنا بڑا مسئلہ

کویت اردو نیوز 28 اکتوبر: خیطان کے علاقہ مکین بیچلرز اور دیگر مسائل کی شکایت کرنے لگے۔

تفصیلات کے مطابق باشندوں کی ایک بڑی تعداد نے انھیں “اپنے علاقے کو مسلسل نظرانداز” قرار دیتے ہوئے اس پر عدم اطمینان کا اظہار کیا جس میں خیطان کو جن سب سے بڑے مسئلے کا سامنا کرنا پڑتا ہے ان میں سے ایک بہت بڑی تعداد میں اہل خانہ (فیملیز) کے درمیان رہنے والے بیچلرس کی موجودگی کا انکشاف کیا گیا ہے۔

روزنامہ الأنباء کی رپورٹ کے مطابق نجی رہائش اور متعلقہ سرکاری ادارے ابھی تک اس مسئلے کو حل کرنے میں سنجیدہ نہیں ہیں۔

انہوں نے بیچلرز کو ختم کرنے اور اس صورتحال سے ثابت قدمی سے نمٹنے کا مطالبہ کیا کیونکہ اس رجحان نے 1970 کی دہائی کے سب سے خوبصورت علاقوں میں سے اس وقت خدمات کی خرابی کی وجہ سے ملک کے بدترین علاقوں میں تبدیل کردیا ہے جو اپنے کنبے اور اپنے بچوں کے لئے شہریوں کی پریشانی میں اضافہ کر رہا ہے۔

خصوصی بیانات میں خیطان میں مقیم شہریوں نے بہت ساری پریشانیوں کے بارے میں بات کی جس میں بھیڑ اور سڑکوں کی خرابی جیسی صورتحال کے خطرے درپیش ہیں۔

انہوں نے وضاحت کی کہ بڑی تعداد میں گڑھوں کی موجودگی کی وجہ سے خیطان میں اکثر مرکزی اور اندرونی سڑکیں خراب معیار سے دوچار ہیں نیز یہ سڑکیں آبادی کے کثافت کے مقابلے میں بہت تنگ ہیں۔ اس کے نتیجے میں بیشتر گلیوں خاص طور پر علاقے کے داخلی اور خارجی راستوں میں لگاتار بھیڑ پڑتی ہے۔

مزید پڑھیں: ڈرائیونگ لائسنس حاصل کرنا اب اور بھی مشکل بنا دیا گیا

اس کے علاوہ پورے علاقے میں افراتفری پائی جاتی ہے خاص طور پر کھلی مارکیٹوں میں سبزیاں اور کھانے پینے کی اشیا فروخت ہوتی ہیں جو گلیوں کے قریب تصادفی طور پر نمودار ہوتی ہیں جبکہ ان مصنوعات کا نہ تو کوئی معیار ہوتا ہے اور نہ ہی کوئی یہ جانتا ہے کہ یہ کہاں سے لائی جاتی ہیں۔

مکینوں نے متعلقہ عہدیداروں سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنے علاقے کے مسائل کے حل کے لئے سنجیدہ اقدامات کریں۔

حوالہ
عرب ٹائمز
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ