کویت

کویت: دبئی میں 14 دن رکنے کی بجائے دوسرا سستا ترین ملک سامنے آ گیا

کویت اردو نیوز 18 اکتوبر: ایتھوپیا کویت میں واپس آنے والے غیر ملکی راستوں کے لئے نیا ٹرانزٹ مقام بن گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق کوویڈ 19 وائرس کے پھیلاؤ کی وجہ سے موجودہ مدت میں کویت اور 34 ممنوعہ ممالک کے مابین ہوائی ٹریفک کی بحالی ناقابل تصور ہوگئی ہے اور ساتھ ہی انفیکشن کی دوسری لہر کے امکان کے بارے میں بھی اطلاعات ہیں۔ روزنامہ القبس کی خبروں کے مطابق ٹرانزٹ پروازوں کے ذریعے کویت واپس جانے کے خواہشمند شہریوں کا رش روزگار اور اپنے اہل خانہ کے لئے بڑھ گیا ہے۔

دبئی میں “کاروباری ٹرانزٹ کے رہائشیوں” پر اجارہ داری ہے کیونکہ اپنے ممالک جا کر واپس آنے والے بیشتر مسافر ایک اور دوسرے ملک کا ٹرانزٹ منزل کے طور پر انتخاب کرتے ہیں۔

“ایتھوپیا” اب ان ممالک کے دائرے میں داخل ہو گیا ہے جہاں سے ٹرانزٹ کی پروازیں شروع ہوں گی اور اس طرح یہ “بزنس ٹرانزٹ” کے لئے مقابلے کے طور پر ایک نیا مقام بن جائے گا خاص طور پر جب دبئی سے ایک فلائٹ ٹکٹ کی لاگت ہر مسافر کے لئے 700 کویتی دینار ہوگئی ہے۔

ٹور آپریٹر حسن الشامی نے کہا کہ “افریقی ممالک سے مقیم تارکین وطن کے ساتھ ساتھ مصریوں اور مغرب ممالک سے آنے والوں کے لئے بھی ایتھوپیا ایک اچھی آپشن ہے۔ ایتھوپیا ممنوعہ ممالک کی فہرست میں شامل نہیں ہے اور اسے ویزا کی بھی ضرورت نہیں ہے نیز رہائش اور ہوٹل کے تحفظات بھی ارزاں اور دستیاب ہیں۔

مزید پڑھیں: کویت مرحوم امیر کویت کے نقش قدم پر چلتا رہے گا: وزیر خارجہ

الشامی کے مطابق ایتھوپیا سے ایک پرواز پہلے ہی کویت پہنچ چکی ہے جس میں مزید “دوسرے دوروں کی تیاریوں” کے بارے میں اشارہ کیا گیا ہے کیونکہ اس پورے پیکیج کی قیمت تقریبا 200 کویتی دینار ہے جس میں ہوائی ٹکٹ، ہوٹل کی رہائش اور میڈیکل ٹیسٹ شامل ہیں۔

حوالہ
عرب ٹائمز
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ