کویت

کویت: کورونا کی دوسری لہر کسی بھی وقت متوقع

کویت اردو نیوز 05 اکتوبر: ملک میں کورونا وائرس کی دوسری لہر کسی بھی وقت متوقع کی جا رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزارت صحت کے ترجمان ڈاکٹر عبداللہ السناد نے عدم تعمیل کے کچھ مظاہروں کی انتباہ اور اس کی خرابیوں کا انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ معاشرتی ذمہ داری کو سمجھنا ضروری ہے۔

ڈاکٹر السناد نے کہا کہ کوویڈ۔19 میں انتہائی نگہداشت اور خصوصی وارڈوں میں گذشتہ ماہ کے مقابلے میں مریضوں میں 8 فیصد اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے جبکہ وزارت صحت کے فیلڈ اسپتال اور خصوصی نگہداشت کے کیسوں میں تقریبا 11 فیصد اضافہ ہوا ہے۔

السناد نے اشارہ کیا کہ کورونا وائرس کے وبا کا مقابلہ کرنا تمام افراد اور اداروں کی ذمہ داری ہے کیونکہ وبائی صورتحال کو کنٹرول کرنا معاشرے کے افراد اور اس کے اداروں کے درمیان مشترکہ تعاون سے حاصل کیا جاتا ہے۔ صحت کے نظام پر دباؤ کو کم کرنا ضروری ہے جس کا ملک کو تقریبا پچھلے 8 ماہ سے چوبیس گھنٹے کا سامنا ہے۔

مزید پڑھیں: صدر پاکستان اور امیر کویت میں بات چیت

ڈاکٹر السناد نے بتایا کہ دنیا کے کچھ ممالک نے کیسوں کو کم کرنے کے لئے سخت اقدامات کا نفاذ کیا ہے جسے ہم مقامی طور پر نفاذ نہیں کرنا چاہتے ہیں کیونکہ اس وبائی امراض کا سامنا کرنے میں سب سے بڑی شرط انفرادی، معاشرتی اور اپنے آس پاس کے لوگوں کے لئے ان کے تحفظ کی آگاہی اور اپنی ذمہ داری کے احساس سے متعلق ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ معمول کی زندگی کی طرف آہستہ آہستہ واپس آنا صرف ایک آپشن تھا اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ کورونا وائرس ختم ہوچکا ہے جب تک کہ کوئی کامیاب علاج یا ویکسین موجود نہ ہو۔ احتیاطی تدابیر پر عمل نہ کرنے کی صورت میں کورونا وائرس کی دوسری لہر کسی بھی وقت ممکن ہو سکتی ہے۔

حوالہ
عرب ٹائمز
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ