کویت

کویت: امیر کویت کے وصال پر خلیجی ریاستیں سوگوار

کویت اردو نیوز 29 ستمبر: کویت سوگ میں ڈوب گیا، امیر الکویت انتقال کرگئے۔

تفصیلات کے مطابق نائب وزیر امیری دیوان شیخ علی الجراح الصباح نے آج کویت ٹی وی پر عوام کو پرسوز خبر سناتے ہوئے اعلان کیا کہ امیر الکویت شیخ صباح الاحمد کا 91 سال کی عمر میں انتقال ہوگیا ہے۔

شیخ صباح نے 2006 سے کویت پر حکمرانی کی اور 50 سال سے زیادہ عرصے تک کویت کی خارجہ پالیسی پر عمل پیرا رہے۔ان کے نامزد جانشین ان کے بھائی ولی عہد شہزادہ شیخ نواف الاحمد الصباح ہیں۔ امیری دیوان نے پیغام دیتے ہوئے کہا کہ “کویت کی عوام، اسلامی و عرب دنیا اور دوست ممالک کے لوگ کویت کے امیر شیخ صباح الاحمد الجابر الصباح کی وفات پر سوگوار ہیں۔

امیر کویت کو طبی معائنے کے لئے 18 جولائی کو اسپتال میں داخل کیا گیا تھا اور پھر ایک دن بعد ان کی کامیاب سرجری بھی ہوئی۔ 23 جولائی کو امیرالکویت اپنا طبی علاج مکمل کرنے کے لئے امریکہ روانہ ہوئے تھے تاہم امیری دفتر نے سرجری کی وجہ یا اس بات کی تفصیلات کے بارے میں نہیں بتایا کہ امیر کا امریکہ میں کیا علاج کیا جاتا رہا یا انکی کیا سرجری کی گئی۔

متحدہ عرب امارات کے شیخ خلیفہ بن زید النہیان نے شیخ صباح الاحمد کے وصال میں تین دن کے سوگ اور جھنڈا سرنگوں رکھنے کا اعلان کیا۔

ابوظہبی کے ولی عہد شہزادہ اور متحدہ عرب امارات کی مسلح افواج کے ڈپٹی سپریم کمانڈر شیخ محمد بن زید النہیان نے امیر کے انتقال پر تعزیت کی۔ انہوں نے ٹویٹ کیا کہ “الصباح خاندان اور کویت کے عوام سے ہمارا مخلصانہ تعزیت ہے۔ شیخ صباح نے دانشمندی، رواداری اور امن کا مظہرہ کیا اور وہ خلیجی تعاون کے عظیم علمبردار تھے۔ انہوں نے عزت اور فضل سے کویت کی خدمت کی اور ان کے کام کو کبھی فراموش نہیں کیا جائے گا۔ خدا اس پر رحم کرے”۔

امیر قطر تمیم بن حماد الثانی نے امیر کویت کے انتقال پر دلی دکھ اور غم کا اظہار کیا اور کہا کہ شیخ صباح ایک عظیم رہنما اور قائد تھے انہوں نے اپنی زندگی اپنے ملک اور اپنی قوم کی خدمت کے لئے وقف کردی”۔

پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

Open

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ