کویت

کویت: قرنطین کی مدت کم کرنے کی تجویز پر غور

کویت اردو نیوز 19 ستمبر: وزارت صحت مسافروں کے قرنطین کو کم کرنے پر غور کر رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزارت صحت ملک میں داخل ہونے والے مسافروں پر لازمی قرنطین کے اطلاق سے متعلق متعدد منظرناموں کا مطالعہ کر رہی ہے۔
وزارت کے باخبر ذرائع نے روزنامہ القبس کو بتایا کہ ان منظرناموں میں 14 دن کی بجائے لازمی قرنطین کی مدت کو 3 سے 7 دن کے درمیان کرنے کی تجویز ہے۔

ذرائع نے مزید کہا کہ اس تجویز کا فی الحال مطالعہ کیا جارہا ہے بشرطیکہ کسی بھی مسافر کے لئے ملک آنے والے پی سی آر ٹیسٹ کا سرٹیفکیٹ لازمی ہے کہ وہ بیرون ملک سے کورونا انفیکشن کے داخلے کو روک سکے اور اس وبا کا زیادہ سے زیادہ محاصرہ کرے۔

ذرائع کے مطابق “صحت” کا مطالعہ علاقائی طور پر وائرس کی وبا کی صورتحال میں ہونے والی پیشرفتوں کی نگرانی کے متوازی ہے تاکہ یہ یقینی بنایا جاسکے کہ کچھ ممالک سے تجارتی پروازوں پر پابندی کی فہرست کو اپڈیٹ کیا جائے چاہے 34 ممالک کی فہرست کو کم کرکے یا “سول ایوی ایشن” کے ساتھ تعاون اور ہم آہنگی میں ممالک کو ان میں شامل کرنا۔

یہ خبر بھی پڑھیں: موبائل سول آئی ڈی استعمال کرنے کی اجازت دے دی گئی

اس تناظر میں سرکاری ذرائع نے القبس کو انکشاف کیا کہ کویت بین الاقوامی ہوائی اڈے کی انتظامیہ نے صحت کے حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ قرنطین کی مدت کو کم کرے اور بیرون ملک سے آنے والے مسافروں سے نمٹنے کے لئے ایک طریقہ کار مرتب کرے۔ ذرائع نے اشارہ کیا کہ ہوائی اڈے اب تقریبا مفلوج ہوچکے ہیں اور چوتھے مرحلے کے بعد سے زندگی کی واپسی کے لئے ایک طریقہ کار طے کرنے میں تاخیر کا شکار ہیں اور آہستہ آہستہ اس کا عمل ایک اشد ضرورت بن گیا ہے جیسے کہ دوسرے ممالک نے کیا ہے۔

پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ