کویت

کویت: چھ ماہ سے زیادہ عرصہ گزارنے کے بعد بھی کویت میں داخلے کی اجازت مل گئی

کویت سٹی 17 اگست: قانونی طور پر اقامہ کی مدت رکھنے والے تارکین وطن 6 ماہ بعد بھی کویت لوٹ سکتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سول ایوی ایشن کے ڈائریکٹوریٹ جنرل (ڈی جی سی اے) نے ایک سرکلر جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ یکم ستمبر 2019 سے چھ ماہ سے زیادہ عرصہ ملک سے باہر رہنے والے باشندوں کو کویت واپس آنے کی اجازت دی جائے۔

سیکیورٹی ذرائع کے مطابق ڈی جی سی اے نے اس سلسلے میں سرکلر جاری کیے جانے کے بعد نائب وزیر اعظم اور وزیر داخلہ کی طرف سے کویت سے باہر موجود تارکین وطن کو کویت میں داخل ہونے کی اجازت دینے کے بعد جاری کیا بشرطیکہ ان تارکین وطن کا رہائشی اجازت نامہ (اقامہ) درست ہو اور اس کی مدت باقی ہو۔

یہ خبر بھی پڑھیں: 31 ممالک کی پابندی قائم رہے گی

ذرائع نے بتایا کہ کویت بین الاقوامی ہوائی اڈے پر کام کرنے والی تمام ایئر لائنز کو سرکلر جاری کیا گیا ہے اور ان سے اس فیصلے کی پابندی کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ یہ قابل ذکر ہے کہ اگر کوئی غیر ملکی چھ ماہ سے زیادہ عرصہ ملک سے باہر رہتا ہے تو یہ رہائشی اجازت نامہ (اقامہ) خود بخود منسوخ ہوجاتا ہے بشرطیکہ اگر یہ ثابت ہوجاتا ہے کہ اسے چھ ماہ سے زیادہ ملک سے باہر رہنے کی اجازت دی گئی ہے لیکن کورونا وبائی امراض کی روشنی اور ہوائی اڈوں کی بندش کی وجہ سے اس قانون میں رعایت دی گئی ہے۔

حوالہ
عرب ٹائمز
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ