کویت

کویت: غیر ملکیوں کو نوکریوں سے فارغ کیا جانے لگا

کویت سٹی 04 اگست: ذیلی معاہدوں Subcontractors پر کام کرنے والے 50 فیصد تارکینِ وطن کو نوکریوں سے فارغ کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق سرکاری وزارتوں کی اکثریت نے کویتائزیشن پالیسی کے نفاذ کے لئے غیر تکنیکی شعبوں میں کام کرنے والے غیر ملکی کارکنان کو نوکریاں سے فارغ کرنا شروع کر دیا ہے۔

سرکاری وزارتوں میں کام کرنے والے غیر ملکی عملے کو برطرف کرنے کے لئے انہیں واضح ٹرمینیشن لیٹرز جاری کئے جارہے ہیں جبکہ تکنیکی شعبوں میں معاہدوں (کنٹریکٹ) پر کام کرنے والے غیر ملکی عملے کو وقتا فوقتا برطرف کیا جائے گا تاکہ وزارتوں کا کام متاثر نہ ہو۔

توقع کی جارہی ہے کہ آئندہ تین ماہ میں ذیلی ٹھیکیداروں (Subcontractors) کے لئے کام کرنے والے 50 فیصد سے زیادہ تارکین وطن کی نوکریاں ختم کردی جائیں گی جبکہ وزارتوں میں براہ راست کام کرنے والے تمام غیر ملکیوں کو نوکریوں سے برطرف کردیا جائے گا۔ ان میں سے بہت سے کارکنان کو وزارتوں کے سبکانٹریکٹرز کے طور پر کام کرنے والی کمپنیوں میں شفٹ کردیا گیا ہے۔

یہ خبر بھی پڑھیں: کویت نے نیا ڈرائیونگ لائسنس متعارف کرا دیا۔

پارلیمنٹری ہیومن ریسورسز ڈویلپمنٹ کمیٹی کے سربراہ و رکن پارلیمنٹ خلیل الصالح نے کہا کہ “کمیٹی نے آبادیاتی مسئلے کو تبدیل کرنے اور ان کی اصلاح کے لئے ٹھوس اقدامات اٹھائے ہیں۔ ہم اپنی رپورٹ تیار کرنے اور ڈیٹا اور شماریات قومی اسمبلی میں پیش کرنے کے لئے اگلے ہفتے ایک اجلاس منعقد کریں گے”۔

رکن پارلیمنٹ الصالح نے متعلقہ حکومتی وزارتوں سے مطالبہ کیا کہ آبادیاتی عدم توازن کی اصلاح کے کام کو تیز کیا جائے خاص طور پر سرکاری شعبے میں غیر تکنیکی ملازمتوں میں کام کرنے والے تارکین وطن کی نوکریوں کی برطرفی کا عمل تیز کیا جائے۔

انہوں نے سول سروسز کمیشن سے مطالبہ کیا کہ حکومتی وزارتوں میں سرکاری ملازمتوں کے ضوابط اور طریقہ کار سے متعلق قرارداد 11/2017 کا سنجیدگی سے اطلاق کیا جائے ، اور تمام غیر ملکیوں کی نوکریاں برخاست کرکے 100 فیصد کویتی افرادی قوت بحال کی جائے۔

حوالہ
عرب ٹائمز
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ