کویت

کویت: PCR ٹیسٹ کی معیاد 72 گھنٹے سے زیادہ نہیں ہونی چاہیے

کویت سٹی 03 اگست “پی سی آر” ٹیسٹ کی تاریخ، کویت آنے کی تاریخ سے 72 گھنٹوں سے زیادہ نہیں ہونا چاہئے۔

تفصیلات کے مطابق سول ایوی ایشن کے ڈائریکٹوریٹ جنرل نے اتوار کو اعلان کیا ہے کہ 31 ممالک سے سفر کرنے والے افراد کو کویت میں داخل ہونے کی اجازت نہیں ہے چاہے وہ ڈائریکٹ پرواز سے آئیں یا دوسرے ممالک سے کنکٹنگ فلائٹ کے ذریعے آئیں۔

سول ایوی ایشن کے ڈائریکٹوریٹ جنرل (ڈی جی سی اے) نے کہا کہ اگر وہ کسی ایسے ملک میں کم سے کم 14 دن قیام کرتے ہیں جس کو کویت آنے کی اجازت ہے تو انہیں کویت میں داخلے کی اجازت ہوگی۔

ڈی جی سی اے نے ایک پریس بیان میں مزید کہا کہ 14 دن کے بعد کویت آنے کا خواہشمند مسافر (COVID-19) وائرس کے لئے اس ملک سے پی سی آر ٹیسٹ کرواے اور اس کی منظوری کا سرٹیفکیٹ فراہم کرے جو منفی نتیجہ ثابت کرتا ہو کہ مسافر کورونا وائرس سے متاثر نہیں ہے جبکہ ٹیسٹ کی تاریخ اور کویت آنے کی تاریخ کے درمیان سرٹیفکیٹ کی جواز 72 گھنٹے سے زیادہ نہیں ہونی چاہئے۔

یہ خبر بھی پڑھیں: کویت ائیر پورٹ کا نظام پہلے ہی دن متاثر ہو گیا

ڈائریکٹوریٹ نے ہفتے کے روز 31 ممالک سے آنے والے تمام مسافروں کو آئندہ اطلاع تک کویت میں داخل ہونے پر پابندی عائد کرنے کا اعلان کیا تھا۔

یہ بات واضح ہے کہ یہ اقدام کویتی صحت کے حکام کی ہدایات کی بنیاد پر اٹھایا گیا ہے جس کی وجہ “زیادہ خطرے والے” ممالک کے بارے میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کی وجہ سے پیدا ہونے والی صورتحال اور عدم استحکام کی وجہ سے ہے۔

کویت ایئرپورٹ پر مسافروں کی سخت چیکنگ

کویت میں داخلے پر پابندی عائد ممالک کی فہرست میں بھارت ، ایران ، چین ، برازیل ، کولمبیا ، آرمینیا ، بنگلہ دیش ، فلپائن ، شام ، اسپین ، سنگاپور ، بوسنیا اور ہرزیگوینا ، سری لنکا ، نیپال ، عراق ، میکسیکو ، انڈونیشیا ، چلی ، پاکستان ، مصر ، لبنان ، ہانگ کانگ ، اٹلی ، شمالی مقدونیہ ، مالڈووا ، پاناما ، پیرو ، سربیا ، مونٹی نیگرو ، ڈومینیکن ریپبلک اور کوسوو شامل ہیں۔

حوالہ
عرب ٹائمز
پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ