کویت

کویت: کمرشل پروازوں کو بحال کرنے کے لئے صحت کے طریقہ کار پر عمل درآمد لازمی قرار

کویت سٹی 03 جولائی: روزنامہ عرب ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق کمرشل پروازوں کو دوبارہ شروع کرنے کے لئے صحت کے طریقہ کار پر عمل درآمد کروانے سے متعلق سول ایوی ایشن کمیٹی کی ملاقات ہوئی۔

تفصیلات کے مطابق سول ایوی ایشن کے جنرل ایڈمنسٹریشن کے سربراہ شیخ سلمان الحمود السباح کی سربراہی میں سپریم کمیٹی نے کویت بین الاقوامی ہوائی اڈے پر تجارتی پروازوں کی تدریجی بحالی کے لئے صحت کے طریقہ کار پر عمل درآمد اور تقاضوں پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

سعد العطیبی نے کویت نیوز ایجنسی (KUNA) کو بتایا کہ تجارتی پروازوں کو دوبارہ شروع کرنے کے لئے متعدد تقاضوں کو اپنایا گیا ہے جن میں “کویت ٹریولر” ویب سائٹ / موبائل ایپلیکیشن کے ذریعے کویت آنے کی منظوری بھی شامل ہے تاکہ سفری طریقہ کار کو آسان بنایا جاسکے اور تمام سرکاری ایجنسیوں اور ایئر لائنز کے طریقہ کار کی وضاحت ہوسکے۔

العتیبی نے مزید کہا کہ ایئر پورٹ کی عمارتوں میں ہیلتھ چیک اپ سینٹرز کی فراہمی کے ساتھ ہیلتھ پروٹوکول کی ضروریات پر عمل درآمد کیا گیا ہے۔
انہوں نے اشارہ کیا کہ تمام ضروری طریقہ کار اور آلات صحت اور احتیاطی ضروریات جیسے (جراثیم سے پاک کرنا، شیشے کی رکاوٹیں، تھرمل کیمرے، فرش اسٹیکرز) کو نافذ کرنے کے لئے تیار ہیں۔

یہ خبر بھی پڑھیں: کویت ائیر ویز نے کمرشل پروازیں بحال کرنے کا فیصلہ کر لیا

یہ منصوبہ تین اہم مراحل پر مشتمل ہے جہاں پہلا مرحلہ یکم اگست سے شروع ہوگا اور یہ اگلے 6 ماہ تک جاری رہے گا اس مرحلے میں مسافروں کی تعداد روزانہ کی بنیاد پر 10,000 تک محدود ہوگی اور متوقع پروازوں کی تعداد 100 پروازیں فی دن ہونگی اسطرح ہوائی آپریشن صرف 30 فیصد کام کرے گا۔

دوسرا مرحلہ یکم فروری 2021 سے شروع ہوگا اور اس کی آپریٹنگ شرح 60 فیصد سے ہوگی اور مسافروں کی متوقع تعداد 20،000 تک محدود ہوگی جبکہ روزانہ 200 پروازیں چلائی جائیں گی۔

تیسرا مرحلہ یکم اگست 2021 سے شروع ہوگا جس میں ہوائی آپریشن 100 فیصد آپریٹنگ ریٹ کے ساتھ کام شروع کردے گا۔ مسافروں کی متوقع تعداد روزانہ 30،000 سے زیادہ ہوگی اور متوقع پروازیں روزانہ 300 ہونگی۔

العتیبی نے اپنے بیان میں واضح کیا کہ کویت بین الاقوامی ہوائی اڈے آنے والے مسافروں کو تصدیق شدہ ہیلتھ سرٹیفکیٹ (پی سی آر) ساتھ لانا لازمی ہے یہ تصدیق ضروری ہے کہ مسافر کووڈ 19 سے پاک ہیں۔ اسکے ساتھ ہی مسافروں کو طیارے میں سوار ہونے سے پہلے (شلونک) ایپلیکیشن پر رجسٹر کرنا لازمی ہے۔ مسافر وزارت صحت کی ہدایات پر عمل پیرا ہونے کا عہد نامے پر بھی دستخط کرینگے اور اس بات کا عہد کرینگے کے وہ صورتحال کے مطابق تمام ہدایات پر عمل پیرا ہونگے اور گھر کا قرنطین بھی قبول کرینگے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس میں ایک تقاضا یہ بھی ہے کہ طیارے میں سوار ہونے سے پہلے تمام مسافروں کے درجہ حرارت کو جانچا جائیگا اور ماسک اور دستانے پہننے ، سماجی فاصلے پر عمل کرنے کے سلسلے میں صحت کی ضروریات کی تعمیل کرنا یقینی بنائی جائے گی۔

التعیبی نے بتایا کہ روانگی کے لئے مسافروں کے لئے صحت کا سرٹیفیکیٹ کویت بین الاقوامی ہوائی اڈ ے کے اندر صحت مراکز کے ذریعہ جاری کیا جاتا ہے جس کو وزارت صحت نے یہ ثابت کرنے کے لئے منظور کیا ہے کہ آیا مسافر سفر کئے جانے والے ملک کے وضع کردہ صحت کی ضروریات کے مطابق کرونا وائرس سے پاک ہے یا نہیں۔ ماسک اور دستانے پہننے ، اسٹرلائزر کے استعمال اور ہوائی اڈے کی عمارتوں کے اندر سماجی فاصلےکے حوالے سے بھی صحت کی ضروریات کی تعمیل کرنا ضروری ہے۔
حوالہ: عرب ٹائمز

پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ