کویت

پارلیمانی وزیر صفا الہاشم قتل کئے جانے کی دھمکیوں کی زد میں

کویت سٹی 29 جون: روزنامہ القبس کی رپورٹ کے مطابق پارلیمانی وزیر صفا الہاشم دھمکیوں کی زد میں ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پارلیمانی وزیر صفا الہاشم نے آج ایک پریس بیان میں انکشاف کیا کہ اپنے غیر متوازن آبادیاتی نظام کے خلاف بولنے اور مطالبہ کرنے پر انہیں 9 دھمکی آمیز ای میلز موصول ہوئی ہیں۔ انہوں بتایا کہ انہیں مسلسل ای میلز موصول ہورہی ہیں آخری ای میل انہیں کل موصول ہوئی ۔بھیجی گئی ای میلز میں صفا الہاشم کو قتل کرنے کی دھمکیاں دی جارہی ہیں۔

View this post on Instagram

صفاء الهاشم: تلقيت تسع إيميلات تهديد بالقتل آخرها أمس والسبب لأنني أطالب بتعديل التركيبة السكانية قالت النائب صفاء الهاشم أنها تلقت خلال الفترة الماضية تسع إيميلات تهددها بالقتل كان آخرها ما وصلها أمس . وأضافت الهاشم في تصريح صحافي : هذا شكل من أشكال الإيميلات التى تصلنى "تهديد بالقتل" لإنني ببساطة نائب كويتي يطالب بتعديل التركيبة السكانية وفرض رسوم على الوافدين .. هزلت .. فعلاً!! وزادت بقولها : شلت يد من كتب هذه الكلمات النابية المذكورة فى الإيميل الذي وصلنى البارحة.. " وعلى فكرة هذا تاسع إيميل بنفس الفحوى وقذاراتها " . لكنني " أشره على حكومتى اللى للحين ماعندها أي خطوات واضحة وفعالة وقوية وحازمة لحل معضلة تركيبة سكانية مختلة كلام فى كلام وسنعمل و سننجز " . وأضافت المصيبة أن كل رسائل التهديد تأتي من جالية واحدة فقط ومازلت أقولها وأكررها : علتنا في من هم معششين فى جنبات مجلس الوزراء وديوان الخدمة المدنية "وجهات أخرى" ، لعبوا فى قوانيننا عن طريق اللوائح التنفيذية وهي التي حرمت الكويتيين من تسلق السلم الوظيفى بشكل صحيح وفوق هذا كله نحن مخترقين من حيث معلوماتنا وبياناتنا وخططنا وميزانياتنا . وقالت أيضاً : لدي سؤال افتراضى " لو رحت ديرتهم ألاقى وافدين فى ممرات ودهاليز مجلس الوزراء عندهم أو فى برلمانهم أو فى ديوانهم الرئاسي أو مستشارين وافدين فى مكاتب وزرائهم ؟ " . واستطردت : فعلا كورونا نعمة .. فضحت كل " الخمال اللى موجود واللى صار لي ٣ سنوات وانا اتكلم وأحذر منه " . . . #صفاء_الهاشم #جريدة_الانباء #الانباء_اخر_الاخبار #الانباء_انستغرام

A post shared by جريدة الأنباء الكويتية (@alanbanews) on

صفا الہاشم نے پریس بیان میں مزید بتایا کہ انہیں جان سے مارنے کی دھمکیاں دینے کی وجہ یہ ہے کہ وہ واحد کویتی وزیر ہیں جو آبادیاتی عدم توازن میں ترمیم اور تارکین وطن پر مختلف نوعیت کی فیس عائد کرنے کا مطالبہ کرتی ہیں انہوں نے یہ بھی انکشاف کیا کہ گزشتہ روز موصول ہونے والی ای میل میں جان سے مارنے کی دھمکی کے علاوہ نہایت بہودہ اور غیر مہذب الفاظ کا استعمال کیا گیا۔

یہ خبر بھی پڑھیں: کویت نے اپنا ہوائی اڈہ کھولنے کا اعلان کر دیا

انہوں نے مزید کہا کہ میں حکومت کی توجہ اس طرف دلوانا چاہتی ہوں کہ اب تک غیر فعال آبادیاتی نظام کے مسئلے کے لئے کوئی واضح ، موثر ، مضبوط اور پُر عزم اقدام نہیں اٹھایا گیا ہے۔

میں اب بھی یہ کہتی ہوں اور اسے دہراتی ہوں کہ ہمارا مسئلہ وہ لوگ ہیں جو کابینہ میں رہتے ہیں اور سول سروس بیورو “دیگر منزلوں” میں جنہوں نے ایگزیکٹو ضوابط کے ذریعہ ہمارے قوانین سے کھیلا۔

اپنے بیان کے آخر میں انہوں نے کہا کہ ” درحقیقت یہ ایک نعمت ہے کہ مجھے شعور ہے۔ میں نے ان تمام لوگوں کو بے نقاب کیا ان مسائل کی نشاندہی کی اور پچھلے تین سال سے میں یہ مطالبے کررہی ہوں۔
حوالہ: روزنامہ القبس

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

Open

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ