کویت

مکمل لاک ڈاؤن کی وجہ سے اقامہ نہ لگنے والوں کے لیے اچھی خبر

کویت سٹی 01 جون: روزنامہ عرب ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق کرفیو اور مکمل پابندی کی وجہ سے اپنی رہائش کی تجدید نہ کر پانے والے افراد کے کیسوں پر نظرثانی ہو گی۔ تفصیلات کے مطابق ایسے تارکین وطن جو بعض وجوہات کی بناء پر اپنی رہائش گاہ کی تجدید نہیں کروا سکے اور سیکیورٹی پابندیوں سے قبل ان کی رہائش گاہ کی تجدید سے انھیں روکا گیا، پاسپورٹ اقامہ دفاتر کھلنے کے بعد ان کے معاملات کی جانچ ہوگی جہاں وہ صرف کرفیو یا مکمل لاک ڈاؤن شروع ہونے سے پہلے کی تاریخ تک جرمانہ ادا کریں گے جبکہ کرفیو یا لاک ڈاؤن شروع ہونے کی تاریخ سے کوئی جرمانہ عائد نہیں کیا جائے گا اس کے بعد وہ جرمانے کی ادائیگی نہیں کریں گے اور انہیں استثنیٰ دی جائے گی۔

وہ تمام افراد جن کے وزٹ ویزہ یا رہائش گاہیں ختم ہوچکی ہیں اور وہ فنگر پرنٹس جیسی رکاوٹوں کا سامنا کررہے ہیں ان کی مدت 31 اگست تک بڑھا دی جائے گی۔ اس سے قبل وزارت نے مخصوص دنوں کے لئے ہر مہینے 01KD کے عوض ہر قسم کے وزٹ ویزا کی تجدید کو کھولا تھا اس سروس کو فی الحال بند کردیا گیا ہے جبکہ اس کی بدلے 31 مئی 2020 سے 31 اگست 2020 تک 3 ماہ کے لئے خودکار تجدید کا نظام متعارف کروا دیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ ایسے افراد جن کے ویزہ کی میعاد ختم ہو چکی ہے 31 اگست 2020 ء تک ان کے ویزوں کی بھی خود بخود تجدید ہوجائے گی۔

اس کے برعکس ایسے طلباء جن کی عمر 18 سال کے قریب ہے اور بنگلہ دیشی اور نیپالی شہریوں کی فنگر پرنٹس کے بغیر اقامہ کی تجدید نہیں ہو سکے گی۔ حوالہ: عرب ٹائمز

پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ