کویت

لاک ڈاؤن علاقے خاردار تاروں سے بند ہوں گے

کویت سٹی 29 مئی: روزنامہ عرب ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق وزارت داخلہ، نیشنل گارڈ اور ڈیفنس خیطان اور فروانیہ کے داخلی اور خارجی راستوں کو بند کر کے ان کی نگرانی کریں گے۔


تفصیلات کے مطابق روزنامہ کے ایک سیکیورٹی ذرائع نے بتایا کہ دفاع اور نیشنل گارڈز فورسز کو لاک ڈاؤن علاقے خصوصا خیطان اور فروانیہ کے علاقوں میں کرفیو کے نفاذ کی ذمہ داری سونپی جائے گی۔


تمام داخلی اور خارجی راستوں کو بند کردیا جائے گا اور ماضی کی ہی طرح جلیب الشویخ طرز کی خاردار تاروں کی رکاوٹیں لگا کر پیدل گشت جاری رکھا جائے گا تاکہ ان علاقوں کو چھوڑنے کی کوشش کرنے والے افراد پر نظر رکھ کر ان کو لاک ڈاؤن علاقوں تک ہی محصور کیا جا سکے۔


لاک ڈاؤن علاقوں میں تارکین وطن کو صرف اپنے علاقوں میں صبح 6 بجے سے شام 6 بجے کے درمیان گھومنے کی اجازت ہو گی اور اس وقت کے بعد وہ اپنی رہائش گاہ پر رہنے کے پابند ہوں گے۔ خلاف ورزی کرنے والوں کو سخت قانونی کارروائی کا سامنا کرنا پڑے گا۔


حوالہ: عرب ٹائمز

پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ