کویت

اتوار سے سرکاری دفاتر کھل جائیں گے

کویت سٹی 27 مئی: روزنامہ کویت ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق حکومت نے قانون سازوں سے اتوار سے ملک میں مکمل لاک ڈاؤن کو ختم کرنے کے بارے میں اپنے رہنمائی اور حفاظتی اصولوں کی رپورٹ طلب کی جس میں سخت صحت کے اقدامات کی پاسداری کرتے ہوئے ملازمین کی بتدریج دفاتر میں واپسی بھی شامل ہے۔ اسمبلی کے اسپیکر مرزوق الغانم نے کہا کہ حکومت نے اتوار سے جزوی کرفیو کو لاگو کرنے کا فیصلہ کیا ہے لیکن اس کی مدت کا تعین جمعرات کو وزرا کی کونسل کرے گی۔


انہوں نے کہا کہ حکام کی جانب سے 9 مئی کو مکمل طور پر لاک ڈاؤن نافذ کرنے کے فیصلہ کے وقت کویت پانچویں مرحلے میں تھا لیکن اب ہم تیسرے اور چوتھے مرحلے میں پہنچ چکے ہیں جس پر سخت پابندی کو کم کرنے کی ضرورت ہے۔ممبران پارلیمنٹ نے کہا کہ وزارت صحت نے اصرار کیا کہ ملازمین کم از کم دو میٹر کی سماجی دوری کی پابندی کریں اور ہر ملازم کو کم از کم 10 مربع میٹر جگہ دی جائے۔ ملازمین کو عوام کے ساتھ معاملات کرتے وقت تمام ضروری احتیاطی تدابیر اپنانی ہوں گی اور چہرے پر ماسک پہننا لازم ہوگا۔ شروع میں وہ ملازمین جو 50 سال سے کم عمر ہیں اور صحتمند ہیں وہ فاصلہ قائم رکھ کر کام کرسکتے ہیں جبکہ دفاتر میں اجتماعی کھانے پر مکمل پابندی ہوگی۔


حکومت نے قانون سازوں کو بتایا کہ وہ سخت اقدامات کا اطلاق کرتے ہوئے تجارتی سرگرمیوں کو بتدریج دوبارہ کھولنے کی اجازت دے گی جس میں صحت کی پیشرفتوں کی بنیاد پر جائزہ لیا جائے گا۔ متعدد اراکین پارلیمنٹ نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ تعلیمی سال ختم کر دیں اور دوسروں نے اصرار کیا کہ اہم معاملات پر فیصلہ کرنے کے لئے اسمبلی باقاعدہ اجلاس منعقد کرنا شروع کردے۔

حوالہ: عرب ٹائمز

پوری خبر پڑھنے کیلئے یہاں کلک کریں شکریہ

متعلقہ مضامین

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

آپ اس خبر کو کاپی نہیں کرسکتے ہیں

Open

ایڈ بلاک پتہ چلا

برائے مہربانی ایڈ بلاک کو بند کریں شکریہ